شوکت ترین پر بھروسہ ہے : وزیراعظم

گزشتہ ماہ وزیر خزانہ کا قلمدان حفیظ شیخ سے لیکر حماد اظہر کو سونپا گیا تھا اور 18 دن عہدہ پر رہنے کے بعد حماد اظہر سے وزیر خزانہ کا قلمدان لے کر شوکت ترین کو سونپ دیا گیا اور حماد اظہر کو عمر ایوب کی جگہ وزیر توانائی کے طور پر مقرر کیا گیا ہے ۔

وفاقی وزیر خزانہ منتخب ہونے کے بعد شوکت ترین نے اسلام آباد میں وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات کی اور اس عزم کا اظہار کیا کہ معاشی شعبے میں اپنے 49 سالہ تجربے کی بنیاد پر ، وہ جانتے ہیں کہ ملکی معیشت کو فروغ دینے کے لئے کیا کرنا چاہئے ۔

شوکت ترین کا کہنا تھا کہ ملک کی جی ڈی پی نمو میں کم از کم 6 سے 7 فیصد تک اضافہ کیا جانا چاہئے ۔نومولود وزیر خزانہ دو روز قبل اسلام آباد میں وزیر اعظم ہاؤس میں اجلاس کے دوران خطاب کر رہے تھے۔

دوسری جانب وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر کے علاوہ پی ٹی آئی کی سوشل میڈیا ٹیم نے بھی شرکت کی ۔

ملاقات کے دوران وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ انہیں وزیر خزانہ کی حیثیت سے شوکت ترین کی صلاحیتوں پر پورا پورا اعتماد ہے ، انہوں نے مزید کہا کہ وہ انھیں پچھلے 35 سالوں سے جانتے ہیں ۔

وزیر اعظم نے کہا مجھے یقین ہے کہ شوکت ترین ملکی معیشت کے مزید استحکام کے لئے بہتر منصوبہ بندی کریں گے ۔

Back to top button