موجودہ وینٹیلیٹرز کی کارکردگی متنازع

نومنتخب وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی شبلی فراز نے کہا ہے کہ پاکستان میں بنائے جانے والے وینٹیلیٹر کارآمد نہیں ہیں کیونکہ وہ اپنے مکمل 16 افعال میں سے 4 ہی انجام دے پارہے ہیں۔

شبلی فراز نے کہا کہ نیشنل ریڈیو اینڈ ٹیلی مواصلات کارپوریشن (این آر ٹی سی) کے ساتھ ساتھ دیگر نجی کمپنیوں نے بھی پاکستان میں وینٹیلیٹر تیار کیے ہیں ، تاہم ان میں 16 فنکشنز میں سے صرف چار موجود ہیں لہذا انہوں نے انہیں بیکار قرار دے دیا ۔

یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ ان کے بیان کے جواب میں سابق وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے ان دعوؤں کی تردید کرتے ہوئے بیان جاری کیا کہ شبلی فراز کو پتا نہیں ہے انہیں ایکسپرٹس اور مینوفیکچررز سے بریفنگ لینی چاہیے ،پاکستان تو دوسرے ممالک کو وینٹیلیٹر فراہم کر رہا ہے۔

 فواد چوہدری کو حالیہ کابینہ میں ردوبدل کے دوران وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی سےوزیر اطلاعات بنایا گیا ہے۔ فواد چوہدری نے دعویٰ کیا کہ پاکستان ان چند ممالک کی صفوں میں شامل ہو گیا ہے جو اپنے وینٹیلیٹر تیار کررہے ہیں جبکہ انہوں نے مزید کہا کہ یہ پیچیدہ مشینیں ہیں اور دنیا کے بہت سارے ممالک اسے بنانے کی صلاحیت نہیں رکھتے ہیں۔

فواد چوہدری نے پڑوسی ملک میں ہونے والے کوویڈ 19 کے بحران کے دوران ہندوستان کو مدد فراہم کرنے کے بارے میں بھی بات کی۔ حکومت ہندوستان کے لئے کورونا وائرس کے خلاف لڑنے کے لئے جو کچھ کر سکتی ہے وہ کرے گی۔ یہ انسانیت کا معاملہ ہے۔ ہمیں ہندوستان سے مکمل ہمدردی ہے۔

Back to top button