لیزر پوائنٹر کے استعمال پر یو ایفا کی کاروائی

دو دھاری تلوار پر چلنے والا محاورہ گزشتہ روز ڈنمارک  کی فٹ بال ٹیم کے گول کیپر پر صحیح بیٹھا۔یورو کپ کے دوسرے سیمی فائنل میں پنلٹی  کک کے دوران گراؤنڈ  میں موجود کراؤڈ میں سے ڈنمارک کے گول کیپر کی آنکھوں پر لیزر لائٹ ماری گئی۔

لیکن اس کے باجود وہ پنلٹی روکنے میں کامیاب ہوگئے۔تاہم ری باؤنڈ پر  انگلش کپتان ہیری کین نے گول کردیا۔

جبکہ  یورپین فٹبال فیڈریشن نے انگلینڈ  کے خلاف کاروائی کا عندیہ دے دیا ہے۔یو ایفا کا کہنا ہے کہ فیصلہ کن مرحلے میں لیزر لائٹ کے ذریعے گول کیپر کی پنلٹی روکنے کی کوشش کو متاثر کیا گیا۔

انگلش فٹ بال ایسوسی ایشن پر ڈنمارک کے قومی ترانے کو روکنے کا بھی الزام عائد کیا گیا ہے۔

برطانوی پریس کی تصاویر میں انگلش کپتان  ہیری کین کے اضافی وقت کے پینلٹی سے عین قبل  ڈنمارک کے گول کیپرشمیچل کے چہرے پر لیزر کی ہری روشنی کی نشاندہی کی گئی  ہے۔

لیسٹر کے گول کیپر کا کہنا تھا کہ "میں نے اسے (لیزر لائٹ)پینلٹی کک کے دوران محسوس نہیں کیا کیوں کہ یہ میرے دائیں طرف تھی”۔

لیکن میں نے اسے دوسرے نصف حصے میں محسوس کیا۔ میں نے ریفری کو بتایا اور میرے خیال میں وہ باہر گیا تھا اور  اس نےدوسرے لائن مینوں میں سے ایک کو بتایا تھا۔

ڈنمارک کے قومی ترانے کے دوران بھی ومبلے کے کچھ حامیوں نے لیزر لائٹ   کا استعمال کر کے  ترانے میں خلل ڈالنے کی کوشش کی تھی۔

یورپی فٹ بال کی گورننگ باڈی نے کہا  ہےکہ ہم  نے انگلینڈ پر ان کے پرستاروں کی جانب سے "لیزر پوائنٹر کے استعمال” ، "قومی ترانے کے دوران ہونے والی پریشانی” اور "آتش بازی کی روشنی” کے الزامات عائد کیے ہیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button