مسک کی ٹویٹ، بٹ کوائن پھر اوپر چلا گیا

بٹ کوائن نے پیر کے روز 40،000 ڈالر کو چھو لیا جو کے دو ہفتوں سے تنزلی کا شکار ہے ، جس کی وجہ ٹیسلا باس ایلون مسک کے ٹویٹس کے ردعمل کو قرار دیا گیا ، جنہوں نے اب کہا ہے کہ ٹیسلا نے بٹ کوائن فروخت کیا ہے لیکن بٹ کوائن استعمال کرتے ہوئے ٹیسلا میں دوبارہ اسکا لین دین شروع ہوسکتا ہے ۔

فروری میں ٹیسلا نے 1.5 بلین ڈالر کے بٹ کوائن کی خریداری کا اعلان کرنے کے بعد سے بٹ کوائن سے متعلق اپنے نظریات پر روشنی ڈالی اور کہا ہے کہ ٹیسلا کی ادائیگی میں یہ بٹ کوائن استعمال کرے گی۔ بعد میں انہوں نے کہا کہ ٹیسلا کمپنی بٹ کوائن کو قبول نہیں کرے گی اس کی وجہ یہ بیان کی گئی کے اس میں یہ خدشات ہیں کے اس کی وجہ سے قیمتی توانائی کے استعمال کی بہت زیادہ ضرورت ہوتی ہے اور توانائی کا ضیاع آب و ہوا کی تبدیلی میں اہم کردار ادا کرتا ہے ۔

مسک نے اتوار کے روز ٹویٹر پر کہا ، جب مستقبل میں سستی اور صاف توانائی کے استعمال کا حصول آسانی سے ممکن ہو جائے گا تو ، ٹیسلا بٹ کوائن کے لین دین کی اجازت دوبارہ کردے گی ۔

اس پیغام کے بعد بٹ کوائن نے نو پرسنٹ سے زیادہ کی ریلی نکالی ، اور اس کی 20 دن کی اوسط بڑھوتری سے بھی زیادہ ہوگئی ، اور ایشیاء کی مارکیٹ میں یہ چڑھ کر 39،838.92 ڈالر تک پہنچ گئی ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button