فلموں میں اپنا کلچر دکھائیں، عمران خان

شارٹ فلم  فیسٹیول میں خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے نوجوان فلم میکرز سے کہا کہ پاکستانی فلموں میں بھارت کی کاپی کی گئی تو انڈسٹری کو بڑا نقصان اُٹھانا پڑا۔

روشن خیالی کے ذریعے سافٹ امیج کچھ نہیں ہوتی،یہ صرف احساس کمتری ہے  کہ ہم  دوسروں جیسا کلچر اپنا کر کہیں کہ ہم تو آپ جیسے ہی ہیں ۔

وزیر اعظم نے کہا کہ اصل سافٹ امیج  خود مختاری میں ہے  اور اس میں ہے کہ اپنا کلچر پروموٹ کیا جائے،انہوں نے کہا کہ اصل بکتا ہے اور نقل کی کوئی اہمیت نہیں ہوتی۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ نائن الیون کے بعد  غلط فیصلے کیے تو فرعی جنگ پاکستان آئی  ہم دہشتگردوں کے خلاف لڑے مگر پھر بھی برا بھلا کہا گیا۔

اسی تقریب میں وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے نوجوانوں سے مطالبہ کیا کہ وہ پاکستان کی  سیاسی حقیقت  پر مبنی فلمیں بنائیں ۔

جبکہ ڈی جی آئی ایس پی آر نے تقریب میں پاکستان کی دہشتگردی سے متعلق بے شمار قربانیوں   کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ  ہم

دہشتگردی کے خلاف جنگ تقریباً جیت چکے ہیں۔

انہوں نے نوجوانوں کو مشورہ دیا کہ پاکستان کی خوبصورتی  دنیا کو دکھائیں جس سے اللہ تعالیٰ نے اسے خوب نوازا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button