عمران خان کا سندھ کے لیے بڑا اعلان

وزیر اعظم عمرا ن خان نے کراچی کے بعد سندھ پیکج کا بھی اعلان کردیا ۔

وزیر اعظم عمران خان نے جمعہ کے روز سہ پہر سکھر میں کامیاب جوان پروگرام کی تقریب اسناد میں  شرکت کے دوران سندھ کے 14 زیر ترقی یافتہ اضلاع کے لئے 440 ارب روپے کے وسیع پیمانے پر پیکیج کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ اس سرمایہ کاری کے اثرات ایک ماہ کے اندر ظاہر ہوں گے ۔

قبل ازیں وزیر اعظم ایک روزہ سفر پر سکھر شہر پہنچے اور انکے دورہ سندھ میں کراچی کا دورہ بھی شامل ہے جہاں انہوں نےاعلی حکومتی اور عوامی نمائندوں سے ملاقاتیں کرنی ہیں۔

وزیر اعظم نے کہا ، سندھ کو ہمیشہ بنیادی سہولیات سے محروم رکھا گیا ہے ،اگر ہم نوجوانوں کو مہارت اور تعلیم سے آراستہ کردیں تو ہم انہیں ملک کے ایک قیمتی اثاثہ میں تبدیل کر سکتے ہیں ۔

کوویڈ ۔19 لاک ڈاؤن کا ذکر کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا ، ہم نے کوویڈ 19 کی وباء کے بعد ملک کو بند نہیں کیا ، جیسا کہ متعدد ترقی یافتہ ممالک کے معاملے میں دیکھا گیا، لیکن   ہمارے اس اقدام سے شر پسند عناصر نے غلط فائدہ اٹھایا ۔

عمران  خان نے اس پر افسوس کا اظہار کیا کہ سندھ حکومت نے کراچی کے ساحل کے ایک جزیرے کے لئے این او سی منسوخ کردی ہے ، اس جزیرے پر سرمایہ کاری سے صوبے کے عوام کو فائدہ ہوسکتا ہے۔

پیکج کے تحت سندھ کے 14 کم ترقیاتی اضلاع کی سماجی و معاشی ترقی کے مقصد سے ، اس پیکیج میں 28،800 ایکڑ اراضی اور 306 کلو میٹر لمبی سکھر حیدرآباد موٹر وے کی آبپاشی کیلئے نائی گاج ڈیم کی تعمیر کا منصوبہ  شامل ہے۔

اس پیکیج سے 160 دیہاتوں کو گیس کی فراہمی بھی یقینی بنائے جائے گی اور مزید 30،000 بجلی کے سالانہ ترسیلات بھی فراہم ہوں گے،لائن لاسز اور بندش کو کم کرنے میں مدد کے لئے بجلی کی ترسیل کو بہتر بنانا بھی اس سکیم کا ایک حصہ ہے۔

تعلیم میں اصلاحات کے ایک حصے کے طور پر ، اعلی تعلیم کا تناسب 52 فیصد پر لایا جائے گا، مزید یہ کہ پیکیج کے تحت 14 پاسپورٹ آفس کو بھی اپ گریڈ کیا جائے گا۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ اگلے دو سال ترقی کے سال ہوں گے کیونکہ پی ٹی آئی کی حکومت سندھ کے عوام میں احساس محرومی کے خاتمے کے لئے ہر ممکن اقدامات اٹھا رہی ہے۔

Back to top button