پیگاسس نے کی عمران خان کی جاسوسی

امریکی اخبار کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی جاسوس سافٹ ویئر پیگاسس سے دنیا  غیر محفوظ ہوگئی۔وزیر اعظم عمران خان کی جاسوسی کی بھی کوشش کی گئی۔

واشنگٹن پوسٹ میں انکشاف کیا گیا  ہےکہ ہیک کیے گئے نمبروں میں ایک ایسا نمبر بھی سامنے آیا جو ایک موقع پر عمران خان کے زیر استعمال رہا۔

ذرائع نے دعوی کیا ہے کہ عمران خان کے خلاف یہ سافٹ ویئر نواز دور حکومت میں استعمال کیا گیا۔نواز دور حکومت میں ہی حساس اداروں اور سیاست دانوں کی جاسوسی کی گئی۔

خیال رہے کہ نومبر 2019 میں پاکستانی آئی ٹی  منسٹری کا خفیہ مراسلہ  بھی منظر عام پر آیا تھا۔مراسلے میں ہدایت کی گئی تھی کہ حساس عہدوں پر  فائز سینئر عہدے دار واٹس ایپ پر سرکاری دستاویز نہ بھیجیں۔

مئی2019،10  سے پہلے خریدے گئے فون بھی استعمال نہ کیے جائیں۔اسی مراسلے میں انکشاف کیا گیا تھا کہ اسرائیلی کمپنی این ایس او کے جاسوس سافٹ ویئر کی مدد سے پاکستان سمیت 20 ملکوں کے شہریوں کے موبائل فونز سے ڈیٹا چرایا گیا ہے۔

پیگاسس نام کے اسرائیلی سافٹ ویئر سے اب تک کئی ملکوں کے سربراہوں ،انسانی حقوق کے وکیلوں اور کارکنوں کے فون ہیک کیے گئے ہیں۔

واشنگٹن پوسٹ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ عمران خان کے علاوہ بھی سینکڑوں پاکستانیوں کے فون کھنگالے گئے ہیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button