خضدار مسافر کوچ حادثہ 18 ہلاک

مقامی نیوز نے جمعہ کو رپوٹ کیا کے ، بلوچستان کے علاقے خضدار میں ایک بس کے گرنے کے نتیجے میں 18 افراد اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے اور 30 ​​زخمی ہوگئے ہیں ۔

یہ بس وڈھ سے دادو کی طرف جارہی تھی جب بلوچستان کے ضلع خضدار کے قریب کھوڑی کے مقام پر الٹ گئی ۔

حادثے کے مقام پر ریسکیو اور لیویز اہلکار پہنچ گئے اور زخمیوں اور جاں بحق افراد کو ٹیچنگ اسپتال خضدار منتقل کیا جہاں زخمیوں میں سے کچھ کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے ۔

ذرائع نے بتایا کہ بس تیز رفتاری کی وجہ سے توازن کھونے کے بعد الٹ گئی ۔

تفصیلات کے مطابق لیویز فورس کے عہدیداروں نے بتایا کہ بس میں سوارعازمین ایک صوفی بزرگ کے مزار پر تشریف لانے کے بعد واپس دادو جا رہے تھے کے بلوچستان کے علاقے خضدار کے قریب کھوڑی کے مقام پر حادثے کا شکار ہوگئے ۔

ریسکیو ذرائع نے مزید بتایا کہ موٹرسائیکل سوار کو ٹکر سے بچانے کی کوشش کے دوران بس کا کنٹرول ڈرائیور کے ہاتھ سے نکل گیا تھا ۔

زخمی مسافروں میں سے ایک ، امام بخش نے پریس کو فون کے ذریعے بتایا کہ مسافروں نے ڈرائیور کو بار بار خبردار کیا کہ وہ زیادہ محتاط رہے ۔ انہوں نے ڈرائیور کو ہی حادثے کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ موسیقی سے لطف اندوز ہو رہا تھا اور لاپرواہی سے ڈرائیونگ کر رہا تھا ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button