کراچی ، ناقابل رہائش شہر

پاکستان کا سب سے بڑا  ،سب سے زیادہ آبادی والا روشنیوں کا شہر کراچی ،جسے "عروس البلاد” اور "روشنیوں کا شہر” کہاجاتا تھا  ،آج دنیا کے دس بدترین شہروں کی فہرست میں شامل ہوگیا ہے ۔

عالمی جریدے نے دنیا کے  قابل رہائش اور نا قابل رہائش شہروں کی ایک فہرست شائع کردی ہے  اور بد قسمتی سے پاکستان کا ترقی یافتہ ترین شہر   کراچی  اس تازہ ترین درجہ بندی میں دنیا کے 10 کم سے کم قابل رہائش شہروں میں  ساتویں پوزیشن پر ہے جبکہ بنگلہ دیش کا دارالحکومت ڈھاکہ چوتھے نمبر پر ہے۔

یہ رپورٹ مختلف شہروں میں رہن سہن،جرائم کی شرح ،ٹرانسپورٹ کا نظام ، انفراسٹرکچر، صحت اور تعلیمی سہولیات تک رسائی کے ساتھ ساتھ سیاسی اور معاشی استحکام کے تناظر میں  تیار کی جاتی ہے ،اکنامکس انٹلیجنس یونٹ نے ان شہروں کا 100 پوائنٹس کی ریٹنگ کے ساتھ تجزیہ کیا ہے۔

کراچی کو استحکام میں 20،صحت عامہ میں 33 اعشاریہ 3،ثقافت اور ماحولیات  میں 33 اعشاریہ 33 فیصد ،تعلیم میں 58 اعشاریہ 3 اورانفراسٹرکچر میں 51 اعشاریہ 8 پوائنٹس دیے گئے ہیں۔

اکنامک انٹلیجنس یونٹ رپورٹ

اکنامک انٹلیجنس یونٹ (ای ایل یو)کے عالمی لیوایبلیٹی انڈیکس کے 2021 ایڈیشن کے مطابق دمشق 68اعشاریہ 6کے اوسط اسکور کے ساتھ دنیا کا سب سے نچلے درجے کا قابل رہائش شہر ہے، کورونا وبا شروع ہونے سے قبل ایشیاء پیسیفک کے خطے کے شہروں کا اسکور 73.09 کے اوسط تک تھا۔

ای ایل یو  کے مطابق بیشتر شہروں کے مقابلے میں وبائی مرض کورونا پر تیزی سے قابو پانے میں کامیاب  ہونے کے باعث آکلینڈ درجہ بندی میں سرفہرست رہا۔ای ایل یو کے مطابق اس سال کے ایڈیشن میں یورپی شہر خاص طور پر پیچھےرہے اور درجہ بندی میں سب سے اوپر دس میں سےآٹھ یورپی شہر ہیں،مثال کے طور پر ویانا پہلے نمبر سے گر کر 12 ویں نمبر پر آگیا، آسٹریا کے دارالحکومت نے کئی سالوں سے اس فہرست کی قیادت کی تھی  جو کہ عام طور پر میلبرن کے ساتھ سب سے اوپر ہوتا تھا تاہم  شمالی جرمنی میں ہیمبرگ میں سب سے زیادہ ڈرامائی زوال آیا جو 34 درجہ گراوٹ سے 47 ویں نمبر پر آگیا۔

حلیم عادل شیخ کہتے ہیں کہ کراچی کو دس بدترین شہروں کی فہرست میں شامل کرنے میں پیپلز پارٹی کا اہم کردار ہے،وفاقی حکومت کا شہر میں 625 ارب روپے کے منصوبوں پر کام جاری ہے،کراچی دشمن پیپلز پارٹی ووٹ نہ دینے  پر شہریوں سے بدلہ لے رہی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button