مہنگائی کی شرح میں مسلسل اضافہ

قومی ادارہ شماریات نے ہفتہ وار مہنگائی کےاعداد وشمار جاری کردیے ہیں ۔محکمہ ادارہ شماریات کے مطابق پچھلے ایک ہفتے کے دوران  ملک میں مہنگائی کی شرح 0.41 فیصد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

پچھلے ایک ہفتے میں 23 اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے۔محکمے کی جاری کردہ رپورٹ کے مطابق 7 اشیاء  ضروریہ کی قیمتوں میں کمی اور 21 کی قیمتوں میں استحکام رہا ہے۔

چند روز قبل گھریلو ا ستعمال کے ایل پی جی سلینڈر کی قیمت میں 102 روپےسے زائد کا اضافہ کیا گیا ہے۔گزشتہ ہفتے کے دوران 5 لیٹر برانڈڈ خوردنی تیل کی قیمت میں61 روپے 34 پیسے کا اضافہ کیا گیا۔

جاری اعداد و شمار کے مطابق پچھلے  ایک ہفتے میں ٹماٹر کی فی کلو قیمت میں 5 روپے 8 پیسے کا اضافہ ہوا۔جبکہ پیاز 2 روپے92 پیسے اورلہسن 6روپے 5 پیسے  فی کلو  مہنگا ہوگیا۔

محکمہ ادارہ شماریات کے مطابق20 کلو آٹے کا تھیلا گزشتہ ہفتے کے دوران میں 5 روپے 28 پیسے مہنگا ہوگیا۔

پچھلے ہفتے کے دوران پھلوں  میں کیلے کی قیمت میں 7 روپے 27 پیسے کی کمی واقع  ہوئی۔تو دوسری جانب زندہ مرغی بھی 6 روپے 66 پیسے اور دال مونگ 1 روپے فی کلو سستی ہوگئی۔

واضح رہے کہ اوگرا نے  چیف سیکریٹری پنجاب کو  خط لکھا ہے جس میں  اوگرا نے چیف سیکریٹری کو ایل پی جی مہنگی فروخت کرنے والوں کے خلاف ایکشن لینے کی ہدایت کی ہے۔

ترجمان اوگرا کا کہنا ہے کہ اوگرا ایل پی جی کی قیمتوں کا تعین کرتا ہے اور اوگرا کی متعین کردہ قیمت پر ہی ایل پی جی فروخت کی جائے۔

ترجمان اوگرا کا یہ بھی کہنا ہے کہ اوگرا کی مقرر کردہ قیمتوں  سے زائد پر ایل پی جی کی فروخت غیر قانونی ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button