رنگ روڈ راولپنڈی میں غیر قانونی تبدیلی

پنجاب کے چیف سکریٹری جواد رفیق ملک نے پیر کے روز راولپنڈی رنگ روڈ اسکینڈل کی سرکاری تحقیقات مکمل ہونے پر کم از کم چھ مڈ کیریئر افسران کو تبدیل کردیا۔

ڈپٹی کمشنر راولپنڈی کیپٹن (ر) محمد انوارالحق ، ڈپٹی کمشنر اٹک علی عنان قمر اور ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر (ریوینیو) کیپٹن (ر) شعیب علی کو فوری طور پر ان کے عہدوں سے ہٹا دیا گیا ہے اور محکمہ سروسز اینڈ جنرل ایڈمنسٹریشن (ایس اینڈ جی اے ڈی)کو رپورٹ کرنے کی ہدایت کی ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ انکوائری میں راولپنڈی رنگ روڈ کے اصل منصوبے میں تبدیلیوں اور کچھ بااثر افراد کو فائدہ پہنچانے کے لئے سڑک کے نئے بنیادی ڈھانچے کی تشکیل میں تبدیلیوں کا انکشاف ہوا ہے،ایک اندازے کے مطابق ان تبدیلیوں سے 40 ارب روپے کے منصوبے کی تخمینہ لاگت میں 25 ارب روپے کا اضافی اضافہ ہوسکتا ہے،وزیر اعظم عمران خان کے حکم پر اس منصوبے پر عمل درآمد روک دیا گیا تھا جب انہیں اس گھوٹالے سے آگاہ کیا گیا تھا۔

[sic] ڈپٹی کمشنر چکوال کیپٹن (ر) بلال ہاشم کو ضلع راولپنڈی کا اضافی چارج سونپا گیا ہے،ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر (محصول) اٹک ، شہریار عارف خان کو ڈپٹی کمشنر اٹک کے عہدے کا اضافی چارج سونپا گیا ہے ، جبکہ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل کیپٹن (ر) قاسم اعجاز ضلع راولپنڈی کے ریونیو ڈیپارٹمنٹ کی بھی ذمہ داری لیں گے۔

Back to top button