ہاکی کا بڑا نام نوید عالم انتقال کر گئے

اولمپیئن اور 1994 میں پاکستان کوہاکی ورلڈ کپ جتوانے والے ہاکی کے قومی ہیرو نوید عالم انتقال کر گئے۔47 سالہ نوید عالم کینسر کے مرض میں مبتلا تھےاور لاہور کے شوکت خانم کینسر ہسپتال میں زیر علاج تھے۔

نوید عالم 16 ستمبر 1973 کو شیخوپورہ میں پیدا ہوئے۔انہوں نے 1996 کی ایٹلانٹا اولمپکس اور سڈنی میں ہونے والے1994 ہاکی ورلڈ کپ میں پاکستان کی نمائندگی کی۔

انہوں نے بطور کوچ بھی قومی ٹیم کے لیے خدمات انجام دیں۔نوید عالم 2008 میں ہونے والے بیجنگ اولمپکس  میں پاکستان  کے ہیڈ کوچ بھی تھے۔

اولمپیئن  نوید عالم کے لواحقین نے نوید عالم کی موت پر تحفظات کا اظہار کیا ہے۔بھائی مبشر چوہدری کا کہنا ہے کہ نوید عالم کی موت اسپتال کے عملے کی نا اہلی کے باعث ہوئی ہے۔

بھائی کا کہنا تھا کہ کیمو  کی ڈوز لگنے کے بعد انکی طبیعت خراب ہوئی ۔وزیر اعظم سے اپیل ہے کہ وہ   واقعہ کا نوٹس لیں اور معاملے کی انکوائری کروائیں۔

مرحوم کی وفات پر سیکریٹری پی ایچ ایف آصف باجوہ اور اولمپیئن  اصلاح الدین سمیت دیگر نے افسوس کا اظہار کیا ہے۔

پنجاب  کےصوبائی وزیر برائےکھیل رائے تیمور خان نے  بھی اولمپیئن نوید عالم کی وفات پر  گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے ان کا کہنا تھا کہ نوید عالم کی ہاکی کیلئے خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔اولمپیئن نوید عالم کی وفات پرافسردہ ہوں، اللہ تعالیٰ نوید عالم کو جنت الفردوس میں بلندمقام عطافرمائے۔

نوید عالم کی نماز جنازہ رات دس بجے کمپنی باغ شیخوپورہ میں ادا کی گئی۔نماز جنازہ میں عزیزو اقارب کے علاوہ  مداحوں اور  ہاکی سے تعلق رکھنے والے متعدد افراد نے بھی شرکت کی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button