نیوزی لینڈ کا دورہ پاکستان فوج ، رینجرز کی مدد طلب

لاہور : پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان انتہائی متوقع کرکٹ سیریز کل سے شروع ہو رہی ہے ، پنجاب حکومت نے بدھ کو پاک فوج اور رینجرز سے سیکورٹی کے انتظامات میں مدد مانگ لی ہے ۔

غیر ملکی ماہرین نے ٹیموں کے لیے حفاظتی انتظامات کو ٹھیک قرار دیا ہے جس کے بعد اب 18 سال کے وقفے کے بعد پاکستان میں بلیک کیپس پہنچے ہیں ۔

پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ 2009 میں سری لنکا کی ٹیم پر دہشت گرد حملوں کے بعد معطل کر دی گئی تھی اب راولپنڈی میں تین ایک روزہ بین الاقوامی میچوں کے دوران وہاں کے اطراف میں سخت سیکورٹی متعین کی گئی ہے ۔

ایک رپورٹ کے مطابق پیرا ملٹری فورس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے لاہور کے قذافی اسٹیڈیم اور اس کے اطراف میں سیکورٹی کے انتظامات بھی شروع کر دیے ہیں ۔

محکمہ داخلہ پنجاب نے لاہور پولیس سے کہا ہے کہ وہ کرکٹ سیریز کے لیے فول پروف سکیورٹی پلان تیار کرے ۔

اس سیریز میں سیکیورٹی کے حوالے سے ، پاک فوج اور رینجرز کے حکام نے قذافی اسٹیڈیم کا دورہ کیا اور اسٹیڈیم کی طرف جانے والی سڑکوں اور کھلاڑیوں کے ڈریسنگ رومز پر فوج کی تعیناتی کے منصوبوں پر بریفنگ دی ۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم پاکستان میں تین ون ڈے اور پانچ ٹی ٹوئنٹی کھیلنے کے لیے تیار ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button