ڈینگی وائرس نے پنجاب کا برا حال کر دیا

لاہور : صوبہ پنجاب میں رواں برس کے دوران اب تک 5700 سے زائد افراد ڈینگی وائرس میں گرفتار ہوچکے ہیں جن میں سے 4 ہزار سے زائد افراد کا تعلق صرف لاہور سے ہے ۔

صوبہ پنجاب سمیت لاہور میں ڈینگی کی صورتحال بے قابو ہوتی جارہی ہے جبکہ ڈینگی کے وائرس سے صوبے بھر میں اب تک 23 لوگ موت کا شکار ہو چکے ہیں ۔

دوسری جانب محکمہ صحت پنجاب کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران پنجاب میں 508 مریضوں میں ڈینگی کی تصدیق ہوگئی ہے جن میں سے 373 مریضوں کا تعلق صرف لاہور سے ہے ۔

اب اس وقت لاہور کے اسپتالوں میں ڈینگی کے 831 مریض داخل ہیں جب کہ لاہور کے علاوہ صوبے کے اسپتالوں میں ڈینگی کے 659 مریض زیر علاج ہیں ۔

کچھ ذرائع نے بتایا ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں جہاں کورونا کے پیش نظر دباؤ کا سامنا ہے وہاں ڈینگی کے مریضوں کا بھی شدید دباؤ ہے ، یہاں تک کے ایک ایک بیڈ پر 3،3 مریض لیٹے ہوئے ہیں اور مزید بیڈ بھی شامل کیے جارہے ہیں ۔

اس بات کا خیال رہے کہ گز شتہ 2 سالوں میں ڈینگی کی صورتحال رواں سال کے برعکس رہی ہے ، 2019 میں پنجاب میں 8 ہزار 674 افراد ڈینگی سے متاثر ہوئے، 2020 میں صرف 247 کیسز سامنے آئے جب کہ ان 2 سالوں میں کوئی موت نہیں ہوئی تھیں ۔

جبکہ کمشنر لاہور نے ایک رپورٹ میں اس بات کا بھی اعتراف کیا ہے کہ کورونا میں توجہ کے باعث ڈینگی کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے اس طرح کام نہیں ہوسکا جس طرح ہونا چاہیے تھا ۔

اور محکمہ صحت پنجاب کا یہ دعویٰ ہے کہ وہ ڈینگی کی روک تھام کے لیے مؤ ثر اقدامات کررہے ہیں ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button