بغیر امتحانات پروموشن کا فیصلہ

آزاد کشمیر اور مظفر آباد میں  پہلی سے آٹھویں جماعت کے طلباء کو  اگلی کلاسز میں پروموٹ کر دیا گیا ہے،حکام کے مطابق کورونا کے باعث امتحانات لینے کے لیے ماحول سازگار نہیں ہے،اسی وجہ سے طلباء کو اگلی کلاسز میں پروموٹ کیا گیا ہے۔

مزید براں طلبہ کو اگلی جماعت کی کتابیں خرید کر  تعلیمی سرگرمیاں شروع کرنے کی ہدایت بھی کی کر دی گئی ہے۔

محکمہ سیکریٹیریٹ الیمنٹری  اینڈ سیکینڈری تعلیم آزاد کشمیر  نے طلبہ کی ترقی کا نوٹیفیکیشن بھی جاری کردیا۔وزیر تعلیم آزاد کشمیر افتخار گیلانی کا کہنا ہے کہ ہم نے آزاد کشمیر میں یہ فیصلہ کیا کہ کلاس 1 سے 8 کے امتحانات  لیے بغیر طلبہ کو اگلی جماعتوں میں ترقی دے دی جائے۔

انہوں نے بتایا کہ یہ فیصلہ اس لیے کیا گیا  کہ 1 سے 8 ویں جماعت کے طلباء  پہلے بھی کووڈ کی صورتحال کے باعث اسکول نہیں جاسکے اور اب بھی انکا اسکول جانا ممکن نہیں،علاوہ ازیں آن لائن تدریسی نظام اتنا  موثر نہیں کہ اسکے ذریعے  پڑھائی کر کے امتحانات دیے جاسکیں۔لہذا ہم نے فیصلہ کیا کہ پہلی تا آٹھویں جماعت کے امتحانات نہ لیے جائیں ۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر بات کی جائے سرکاری اسکولوں کی تو وہاں تو آن لائن کلاسوں کا بھی کوئی خاص انتظام نہیں ہوا اور نجی اسکولز میں بھی بہت کم تعداد ایسی ہے جہاں باقائدگی سے اور بہتر انداز میں آن لائن تدریس عمل میں آئی ہو۔

 نویں اور دسویں جماعت کے امتحانات سے متعلق سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ  آزاد کشمیر میں بھی  ملک کے باقی حصوں کی طرح نویں اور دسویں جماعت کے امتحانات کا انعقاد کیا جائے گا۔

وزیر تعلیم کا اعلان کردہ شیڈول

دوسری جانب وزیر تعلیم سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ وہ  بین الصوبائی وزرائے تعلیم  اجلاس کے فیصلوں سے متفق ہیں لیکن وفاقی وزیر تعلیم کا اعلان کردہ شیڈول  ، سندھ کا شیڈول نہیں چند روز میں اپنے امتحانی شیڈول کا اعلان کردیں گے سندھ  میں ہونے والے امتحانات میں کورونا ایس ا و پیز کو یقینی بنایا جائے گا۔

یاد رہے گزشتہ روز  بین الصوبائی وزراء تعلیم کے اجلاس میں نویں تا بارہویں جماعت  کے امتحانات سے متعلق حتمی فیصلے کیے گئے۔

پہلا فیصلہ یہ کیا گیا کہ 9ویں اور 10ویں جماعت کے صرف انتخابی مضامین اور حساب کے مضمون کے امتحانات ہوں گے۔

دوسرا  ،11ویں اور 12ویں جماعت کے صرف انتخابی مضامین کے امتحانات ہوں گے۔

تیسرا ،   9ویں تا 12ویں کے امتحانات 24 جون کے بجائے 10 جولائی کے بعد شروع کیے جائیں گے۔

چوتھا،  پرچوں کے دوران آپس میں تھوڑا زیادہ وقفہ رکھا جائے گا۔

پانچواں، 10ویں اور 12 ویں کے امتحانات پہلے ہوں گے اور 9ویں اور 11ویں کے اسکے بعد ہوں گے۔

چھٹا، ستمبر کے تیسرے ہفتے تک سارے نتائج آجائیں گے۔

ساتواں، کوئی بھی استاد کورونا ویکسین کے بغیر  امتحان  نہیں لے گا۔

آٹھویں ، اساتذہ کی ویکسی نیشن ترجیحی بنیادوں پر کی جائے گی۔

Back to top button