ایک دن کے لیے کاروبار بند رکھنے کا فیصلہ

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشنز سینٹر (این سی او سی) نے بدھ کے روز ،15 جون سے ملک میں کورونا وائرس کی تیسری لہر کے دوران کوویڈ 19 کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے  لگائی گئی پابندیوں میں قدرے نرمی لانے کا فیصلہ کیا ہے۔

این سی او سی نے 11 جون (جمعہ) سے 18 سال اور اس سے اوپر کے شہریوں کے لئے واک ان ویکسین شروع کر نے کا بھی اعلان کیا۔

یہ فیصلے این سی او سی کے سربراہ اسد عمر اور قومی کو آرڈینیٹر لیفٹیننٹ جنرل حمود الز زمان کی زیرصدارت  این سی او سی  کے ایک خصوصی اجلاس کے دوران لیے گئے۔

این سی او سی نےکورونا ویکسی نیشن کے عمل اور کوویڈ ایس او پیز (این پی آئی) کے نفاذ کا ایک جامع جائزہ لیتے ہوئے ہفتے میں کاروبار پر دو دن کی بندش  ختم کر کے صرف ایک دن کے لیے کاروبار بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے، چھٹی کے دن کا انتخاب وفاق  نے صوبوں کی صوابدید پر چھوڑا ہے۔

مزید یہ کہ انڈور اجتماع کو جزوی طور پر صرف ویکسین نیشن کروانے والے افراد کے لیے کھولنے کی اجازت دی گئی ہے تاہم  مزارات پر  مکمل پابندی عائد رہے گی ، اور سینما گھر بھی بالکلیہ بند رہیں گے۔

کھیل اور تہوار

این سی او سی کے فیصلے کے مطابق صرف منتخب اور غیر رابطہ کھیلوں کی اجازت ہوگی جبکہ رابطہ کھیلوں پر پابندی عائد ہوگی۔

کراٹے ، باکسنگ ، ایم ایم اے ، رگبی ، کبڈی ، ریسلنگ اور واٹرپولو کے علاوہ ثقافتی تہوار وں پر بھی پابندی برقرار  رہے گی۔

این سی او سی نے دفاتر میں 50 فیصد حاضری کی پابندی میں  بھی نرمی کرتے ہوئے  100 فیصد حاضری کی اجازت دے دی ہے ،یعنی اب سے د فاتر کا مکمل عملہ  ایک وقت میں دفاتر میں حاضر ہوسکے گا۔

مزید یہ کہ بین الصوبائی ٹرانسپورٹ پر دو دن کی ہفتہ وار پابندی بھی ختم کردی جائے گی ، جبکہ پبلک ٹرانسپورٹ میں 50٪ کے بجائے اب 70 فیصد مسافروں کو بٹھانے کی اجازت ہوگی۔

تفریح ​​، تعلیم کے شعبے ، ماسک پہننے ، ریلوے اور اندرونی مسافروں کی پالیسی کے بارے میں این سی او سی کے ذریعہ پہلے سے اعلان کردہ موجودہ پابندیاں اگلے احکامات تک برقرار رہیں گی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button