بلاول کی کشمیر مہم جاری

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی آزاد کشمیر میں انتخابی مہم بھر پور طریقے سے جاری ہے ، بلاول  نے آزاد کشمیر کوٹلی میں انتخابی  جلسے سے  خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ذوالفقار علی بھٹو نے ملک کو ایٹمی قوت بنایا لیکن خان صاحب کہتے ہیں کہ جوہری ہتھیاروں کی ضرورت نہیں ، یہ بزدل سیکیورٹی رسک بن چکے ہیں۔

بلاول نے کشمیری عوام کو مخاطب کر کے کہا کہ پیپلز پارٹی وہ واحد جماعت ہے جو  مودی پر  سمجھوتہ نہیں کرتی،جیسے وہ آپکا دشمن ہے ویسے ہی وہ ہمارا بھی دشمن ہے،بلاول نے  نواز شریف پر بھی طنز کیا اور کہا کہ ہم  مودی کو ہمارے گھر ،ہماری خوشیاں منانے کے لیے نہیں بلاتے ہیں ۔

مزید کہا کہ مودی کو نہ کبھی گھر کی خوشیوں میں بلایا نہ اس سے سودا کیا،بے نقاب کیا تو ن لیگ اور پی ٹی آئی والے بھی مان گئے کہ مودی فاشسٹ ہے۔

حکومت پر بھی تنقید کی کہا کہ حکومت کی ناکام پالیسیوں کا بوجھ عوام اُٹھارہے ہیں آزاد کشمیر کے لوگوں کے حقوق پر سودے بازی نہیں کریں گے،آزاد کشمیر میں اگلی حکومت پیپلز پاٹی کی ہوگی اور  پاکستان کا وزیر اعظم  بھی جیالا ہوگا،کشمیر کے لیے ایک ہزار سال تک جنگ لڑنا پڑی تو لڑیں گے۔

سنگین الزامات

انہوں نے وزیر اعظم عمران خان پر سنگین الزامات لگاتے ہوئے کہا کہ عمران وہ کٹ پتلی ہے جس نے وعدہ کیا تھا کہ وہ کشمیر کا سفیر بنے گا لیکن وہ تو کلبھوشن کے وکیل بن چکے ہیں، عمران خان بھارتی جاسوس  کلبھوشن کو این آر او دینا چاہتے ہیں۔

جس نے بار بار کہا تھا کہ کسی کو این آر او نہیں دوں گا وہ صرف کلبھوشن کو این آر او دینا چاہ رہا ہےلیکن پیپلز پارٹی اس جرم میں حکومت کا ساتھ نہیں دے گی۔

 جب کلبھوشن نے انکے این آر او کا فائدہ نہیں لیا تو پھر یہ مجبور ہوکر پارلیمان کے سامنے آگئے، اب چاہتے ہو کہ پارلیمان بھی آپکے اس جرم میں ملوث ہو۔

اسلام آباد میں بیٹھے کٹ پتلی وزیر اعظم کے ڈکٹیشن پر نہیں چلیں گے بلکہ ہمارا نعرہ سب پے بھاری-رائے شماری رائے شماری۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button