ماہرین کے مطابق ٹوکیو اولمپکس ایک خطرہ قرار

جاپان میں کورونا وائرس کے ماہرین نے ٹوکیو اولمپکس 2021 کے کھیلوں کو کم کرنے کی درخواست کی ہے ۔

ماہرین کی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کوئی بھی تماشائی کسی بھی قسم کے وائرس کے ساتھ خطرناک ہوسکتا ہے ۔

ٹوکیومیں جاپان کے اعلی طبی ماہرین نے جمعہ کے روز انتباہ جاری کیا کہ کووڈ جیسے وبائی امراض کے دوران اولمپکس کے انعقاد سے انفیکشن میں اضافہ ہوسکتا ہے ، اور کہا کہ تمام شائقین پر پابندی لگادینے سے ہی سب سے کم خطرہ ہوگا ، مگر اس سے منتظمین کے ساتھ ممکنہ تصادم پیدا ہوسکتا ہے ۔

ٹوکیو 2021 کی آرگنائزنگ کمیٹی کے سربراہ نے مقامی اخبار کو بتایا کہ انہوں نے مشیر برائے صحت شیگرو اومی کی سربراہی میں اس رپورٹ کو جاری کیا ہے ، وہ 23 جولائی کو شروع ہونے والے عالمی کھیلوں کے لئے اسٹیڈیم میں 10،000 شائقین کی اجازت دینا چاہتے ہیں ۔

جاپان کووڈ سے مقابلے کے لیے کافی آگے بڑھ رہا ہے لیکن کورونا انفیکشن اور عوامی مخالفت میں اضافے کے خدشات بدستور موجود ہیں ۔ جاپان کئی ارب ڈالر ان کھیلوں کی میزبانی کے لیے خرچ کر چکا ہے تاہم کھیل اب بھی تاخیر کا شکار ہیں ، اگرچہ منتظمین نے بیرون ملک مقیم تماشائیوں پر پابندی بھی عائد کردی ہے ۔

اگر ٹوکیو اولمپکس منسوخ ہو جاتے ہیں تو یہ پھر کئی دہائیوں بعد جاپان کے حصہ میں آئینگے اور منتظمین ، ٹوکیو حکومت ، سپانسرز اور انشورنس کمپنیوں کے لئے ایسا سودا بہت مہنگا ہوگا ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button