پاکستانی یوٹیلٹی اسٹورز پر بھی مہنگائی کا طوفان

کراچی : پاکستانی یوٹیلٹی اسٹورز پر ایک بار پھر مختلف اشیاء کی قیمتوں میں زبردست اضافہ کر دیا گیا ہے ۔

نئے نوٹیفکیشن کے مطابق یوٹیلٹی اسٹورز پر مختلف برانڈز کی ایک کلو چائے کی پتی 100 سے 200 روپے مہنگی کر دی گئی ہے جبکہ بچوں کا 500 گرام فارمولا دودھ 60 روپے اور ایک کلو کپڑے دھونے کا پاوڈر 10 روپے مہنگا کر دیا گیا ہے ۔

اب نئی قیمت میں سرکاری اسٹورز پر کافی کے 100 گرام جار کی قیمت 50 روپے تک بڑھا دی گئی ہے ، اسی طرح ایک کلو کسٹرڈ کے 300 گرام کا پیکٹ 5 روپے، کارن فلور 300 گرام 20 روپے ، 250 گرام شہد 95 روپے تک مہنگا کر دیا گیا ہے ۔

دوسری جانب کراچی، حیدرآباد، سکھر، لاڑکانہ، گوجرانوالا اور کوئٹہ میں چینی کی قیمت 120روپے فی کلو تک پہنچ گئی ہے۔

 ترجمان یوٹیلٹی اسٹورز کا کہنا ہے کہ اسٹورز  پر چینی، دال، آٹا اور گھی سمیت 5 بنیادی اشیاء پر سبسڈی دی جا رہی ہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز  وزیراعظم عمران خان نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھانے کی اوگرا کی تجویز مسترد کر دی تھی۔

جبکہ گھی کی قیمتوں میں 96 روپے تک فی کلو اضافہ ہوا ہے اور 370 روپے تک فی لیٹر اضافے کے بعد کارن کوکنگ آئل کی قیمت 500 سے بڑھ کر 870 روپے فی لیٹر ہوگئی ہے ۔

اس نئے نوٹیفکیشن کے مطابق ٹی وائٹنر کی 1.2 کلوگرام قیمت 40 روپے تک بڑھادی گئی ہے، کسٹرڈ، کھیر سمیت مختلف سویٹ ڈشز کے چھوٹے ڈبے 10 روپے تک مہنگے ہوگئے ہیں ۔

متعلقہ مضامین

Back to top button